Press "Enter" to skip to content

2018 کا نوبیل امن انعام عراق کی نادیہ مراد اور کانگو کے ڈاکٹر ڈینس نے جیت لیا

رواں برس کا نوبیل امن انعام عراق کی یزیری خاتون نادیہ مراد اور کانگو کے ڈاکٹر ڈینس موکیگی نے جیت لیا۔

نوبیل امن انعام کی تقریب ناروے کے دارالحکومت اوسلو میں منعقد ہوئی جہاں نادیہ مراد اور ڈاکٹر ڈینس موکیگی کو نوبیل امن ایوارڈ سے نوازا گیا۔

اوسلو میں منعقد ہونے والی تقریب میں نادیہ مراد اور ڈاکٹر ڈینس موکیگی کو گولڈ میڈل، ڈپلومہ اور 10 لاکھ ڈالرز کی انعامی رقم دی گئی، 10 لاکھ ڈالرز کی انعامی رقم ایوارڈ جیتنے والی دونوں شخصیات کے درمیان تقسیم ہو گی۔

نادیہ مراد داعش کی غلامی سے فرار ہونے کے بعد خواتین کے حقوق کے لیے کام کرنے پر نوبیل ایوارڈ سے نوازا گیا جب کہ ڈاکٹر ڈینس موکیگی کو جنگ زدہ ملک جمہوریہ کانگو میں تشدد کا نشانہ بننے والی خواتین کی مدد کرنے پر نوبیل امن انعام سے نوازا گیا۔

خیال رہے کہ 2012 میں طالبان کے حملے میں شدید زخمی ہونے اور بچیوں کی تعلیم کے لیے کام کرنے پر پاکستان کی ملالہ یوسفزئی کو بھی 2014 میں نوبیل امن انعام سے نوازا گیا تھا۔

x

Please follow and like us:

Be First to Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *