Press "Enter" to skip to content

نواز شریف نے اس بار سالگرہ منانے سے انکار کر دیا

اسلام آباد (21دسمبر 2018ء) اسلام آباد میں 4 مصروف دن گزارنے کے بعد سابق وزیراعظم نواز شریف گذشتہ روز واپس اپنی رہائش گاہ جاتی امرا پہنچ گئے۔25 دسمبر کو نواز شریف کی سالگرہ ہے اور 24 دسمبر کو نواز شریف کے خلاف دائر اہم ریفرنسز کا فیصلہ بھی آنا ہے۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ رہائش گاہ پہنچنے پر نواز شریف سے سینئیر کارکنان نے نواز شریف کی سالگرہ کے حوالے سے کیک کاٹنے سے متعلق پوچھا تو نواز شریف نے انہیں منع کر دیا۔
کارکنان کے مطابق نواز شریف نے کیک کاٹنے کی تقریب سے منع 24دسمبر کے فیصلے کے خلاف آنے کے خدشے سے نہیں بلکہ اس سال اپنی اہلیہ کلثوم نواز کے نہ ہونے کے دُکھ میں کیا۔خیال رہے نواز شریف 25 دسمبر 1949ء کو پیدا ہوئے تھے۔وہ ہر سال اپنی سالگرہ مناتے ہیں تاہم اس بار ان کی سالگرہ یادگار بن سکتی ہے۔

کیونکہ نواز شریف کے خلاف نیب ریفرنسز فیصلے میں نواز شریف کو یا تو سزا ہو گی یا پھر ان کی بچت ہو جائے گی۔

اگر نواز شریف کے حق میں فیصلہ آتا ہے تو پھر یہ سالگرہ ان کے لیے یادگار بن جائے گی تاہم دوسری صورت میں ان کو اپنی سالگرہ جیل میں منانی پڑے گی۔پچھلے سال سابق وزیر اعظم و مسلم لیگ (ن) کے قائد میاں محمد نواز شریف نے اپنی 68ویں سالگرہ منائی جبکہ مسلم لیگ (ن) کے رہنما وں اورر کارکنوں کی جانب
سے بھی مختلف مقامات پر سالگرہ کی تقریبات کا اہتمام کیا گیا تھا۔
مسلم لیگ (ن) کے رہنمائوں کی جانب سے میاں محمد نواز شریف کی سالگرہ پر ان کی رہائشگاہ پر پھولوں کے گلدستے اور کیک بھجوائے گئے تھے ۔ مریم نواز نےقائد اعظم محمدعلی جناح اور اپنے والد نواز شریف کی سالگرہ کی مناسبت سے ٹوئٹر پر مبارکباد کا پیغام ٹوئٹ کیا ۔جاتی امرا ء میں سابق وزیراعظم کی رہائشگاہ کے باہر کارکنوں کی بڑی تعداد نے سالگرہ کا کیک کاٹا۔ اس موقع پر نوازشریف کی درازی عمر مشکلات کے حل کے لئے بکرے کا صدقہ بھی دیا گیا تھا ۔صوبائی دارالحکومت لاہور سمیت ملک کے مختلف مقام پر نوا زشریف کی سالگرہ کی مناسبت سے کیک کاٹنے کی تقریبات منعقد کی گئیں تھیں جس میں نواز شریف کی درازی عمر اور ملک و قوم کی سلامتی کے لئے دعائیں مانگی گئیں۔

Please follow and like us:

Be First to Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *