Press "Enter" to skip to content

مولانا فضل الرحمان کی ایم ایم اے نے تحریک انصاف کی حکومت کی حمایت کردی

اسلام آباد (11 دسمبر2018ء) مولانا فضل الرحمان کی ایم ایم اے نے تحریک انصاف کی حکومت کی حمایت کردی، حکمراں جماعت کے رکن اسمبلی رمیش کمار کی جانب سے پیش کیے گئے شراب کے اجازت نامے منسوخ کرنے کے بل کی حمایت کی۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان کی سیاست میں کئی مرتبہ ایسے معاملات دیکھنے میں آتے ہیں جو عوام کو چکرا کر رکھ دیتے ہیں۔
عمومی طور پر سیاسی جماعتیں ایک دوسرے کی مخالفت میں اس حد تک چلی جاتی ہیں کہ یوں لگتا ہے جیسے یہ کبھی ایک ساتھ نہیں بیٹھ سکتیں۔ تاہم پھر اچانک کسی معاملے پر مشترکہ مفاد دیکھتے ہوئے مخالفت کو بھول کر ساتھ بیٹھ جاتی ہیں۔ ایسا ہی کچھ منگل کے روز قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران بھی دیکھنے میں آیا۔

منگل کے روز ہونے والے قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران اس وقت سب حیران رہ گئے جب مولانا فضل الرحمان کی قیادت میں بننے والے مذہبی جماعتوں کے اتحاد ایم ایم اے نے حکمران جماعت تحریک انصاف کی حمایت کرنے کا اعلان کر دیا۔

منگل کے روز ہونے والے قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران حکمراں جماعت تحریک انصاف کے رکن رمیش کمار کی جانب سے شراب پر پابندی کے حوالے سے ترمیمی بل پیش کیا گیا۔ رمیش کمار نے ترمیمی بل پیش کرتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ چونکہ شراب تمام مذاہب میں حرام ہے، اس لیے اس کے استعمال اور اس کی فروخت پر پابندی عائد کی جائے۔ رمیش کمار کی جانب سے پیش کیے گئے ترمیمی بل کی مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی نے مخالفت کی، تاہم اپوزیشن پارٹی متحدہ مجلس عمل نے اس بل کی منظوری کیلئے حکمراں جماعت تحریک انصاف کا ساتھ دیا۔ تاہم اس کے باوجود شراب پر پابندی کا ترمیمی بل منظور نہ ہو پایا۔ حکومت اپنے اکثریتی اراکین کی غیر حاضری کے باعث بل منظور کروانے میں ناکام رہی۔

Please follow and like us:

Be First to Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *