Press "Enter" to skip to content

ایمپریس مارکیٹ کے متاثرین: پہلے مرحلے پر 1470 دکانیں، اسٹالز دیے جائیں گے

کراچی: میئر کراچی وسیم اختر نے ایمپریس مارکیٹ کے متاثرین کو متبادل دکانیں دینے کا اعلان کر دیا، پہلے مرحلے میں 1470 دکانیں اور اسٹالز قرعہ اندازی کے ذریعے دیے جائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق میئر کراچی نے ایمپریس مارکیٹ کے متاثرین سے کیا وعدہ نبھانے کا آغاز کر دیا، متاثرین کو قرعہ اندازی کے ذریعے مرحلہ وار متبادل جگہیں دینے کا اعلان کر دیا گیا۔

مختلف علاقوں میں دکانیں قرعہ اندازی کے ذریعے دی جائیں گی۔

میئر کراچی
پہلے مرحلے کے بعد دوسرے مرحلے میں متاثرین کو قرعہ اندازی سے 2100 دکانیں دی جائیں گی، لائنز ایریا پارکنگ پلازہ کے گراؤنڈ، میز نائن فلور میں 240 دکانیں دی جائیں گی۔

پی آئی ڈی سی روڈ پر کے ایم سی فرنیچر مارکیٹ میں 250 دکانیں دی جائیں گی، جب کہ پارکنگ پلازہ کے سامنے خالی پلاٹ پر 400 دکانیں دی جائیں گی اور لائنز ایریا شہاب الدین مارکیٹ میں 350 دکانیں دی جائیں گی۔

رنچھوڑ لائن کے ایم سی مارکیٹ میں بھی 61 اسٹال، اکبر روڈ فرنیچر مارکیٹ کے ایم سی میں 42 اسٹالز الاٹ کیے جائیں گے جب کہ لیاری کھڈا مارکیٹ میں 100 متبادل دکانیں، اور کے ایم سی لیاقت آباد سپر مارکیٹ میں 27 اسٹالز دیے جائیں گے۔

قبل ازیں ایمپریس مارکیٹ و دیگر متاثرین کی بحالی کے منصوبے کا جائزہ اجلاس منعقد ہوا جس میں حکمتِ عملی کا تفصیلی جائزہ لیا گیا، اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ تمام متاثرین کو متبادل دکانیں دی جائیں گی۔

میونسپل کمشنر ڈاکٹر سیف الرحمان نے کہا کہ بحالی منصوبے پر عمل درآمد کے انتظامات مکمل کر لیے گئے، متاثرین کی تفصیلات جمع کر لی گئی ہیں۔

میئر کراچی کا کہنا تھا کہ مختلف علاقوں میں دکانیں قرعہ اندازی کے ذریعے دی جائیں گی، اجلاس میں ایمپریس مارکیٹ کی تاریخی حیثیت کی بحالی کے اقدامات پر غور کیا گیا، محکمہ ثقافت کی مشاورت سے منصوبے پر عمل درآمد کیا جائے گا۔

Please follow and like us:

Comments are closed.