Press "Enter" to skip to content

اگر ہمت ہے تو بے نامی وزیراعظم کی تفتیش کر کے دکھاؤ: بلاول بھٹو

نوڈیرو: چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ نیب کی پھرتیاں صرف اپوزیشن کے رہنماؤں کے لیے کیوں ہیں، اگر ہمت ہے تو بے نامی وزیراعظم کی تفتیش کر کے دکھاؤ۔

گڑھی خدا بخش میں بے نظیر بھٹو کی برسی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ میرے لیے اصل سرمایہ بے نظیر بھٹو کے جیالے ہیں جو 11 سال بعد بھی ان کی یاد کو زندہ کیے ہوئے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ تمام قوتوں کو پیغام دینا چاہتا ہوں کہ تم سے اور تمہاری سازشوں سے، تمہارے جھوٹ سے لڑوں گا، تمہارے غرور کو تار تار کردوں گا۔

چیئرمین پیپلز پارٹی کا کہنا تھا کہ شاید سلیکٹڈ وزیراعظم کو پتہ نہیں کہ وفاق کی بنیادیں کتنی کمزور ہو چکی ہیں، کیا وجہ ہے کہ سندھ کے مفادات اور اعتراضات ردی کی ٹوکری میں پھینکے جا رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مجال ہے کہ اس ملک کے ٹھیکیداروں کو کچھ احساس ہو، میاں صاحب کو سزا دلوانے کے بعد جو نعرے پنجاب میں لگے اس کا کوئی تصور بھی کر سکتا تھا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ جس طرف نظر دوڑائيں غم و غصے کی لہر ہے، لیکن مجال ہے کہ ملک کے نام نہاد ٹھیکیداروں کو کوئی فکر ہو۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ آج ملک کی باگ ڈور ناتجربہ کار کے ہاتھ دے دی گئی ہے، یہ کیسا وزیراعظم ہے جسے اپنے وزیراعظم ہونے کا بیوی سے اور روپیہ گرنے کا ٹی وی سے پتہ چلتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ تجاوزات کے خاتمے کے نام پر لاکھوں غریبوں کو گھر کی چھت سے محروم کر دیا گیا۔

چیئرمین پیپلز پارٹی کا کہنا تھا کہ اگر خان صاحب کو حکومت دینا ہی تھی تو تھوڑی تیاری ہی کرا دیتے، انہیں یہ تو سکھا دیتے کہ کرکٹ اور حکومت میں زمین آسمان کا فرق ہے، سمجھا دیتے کہ مرغی اور انڈوں سے قوم کی تقدیریں نہیں بدل سکتیں۔

انہوں نے کسی کا نام لیے بغیر کہا کہ آپ نے بے نامی اکاؤنٹس کی تفتیش کرائی، ہمت ہے تو بے نامی وزیراعظم کی تفتیش بھی کرائیں۔

Please follow and like us:

Comments are closed.