Press "Enter" to skip to content

’اندھے انتقام کی آخری ہچکی‘: نوازشریف کیخلاف فیصلے پر مریم کا رد عمل

لاہور: نوازشریف کی صاحبزادی مریم نواز نے اپنے والد کی مزید دو نیب ریفرنسز میں سزا کو اندھا انتقام قرار دے دیا۔

سابق وزیراعظم میاں نوازشریف کے خلاف مزید دو نیب ریفرنسز کا فیصلہ سنادیا گیا ہے جس میں احتساب عدالت نے انہیں فلیگ شپ ریفرنس میں بری کیا ہے جب کہ العزیزیہ اسٹیل ملز ریفرنس میں 7 سال قید کی سزا سنائی ہے۔

نوازشریف کے خلاف نیب ریفرنسز کے فیصلوں پر مریم نواز نے اپنے ٹوئٹر پر رد عمل کا اظہار کیا۔

سابق وزیراعظم کی صاحبزادی نے کہا کہ ’ایک ہی شخص کو چوتھی بار سزا ، اندھے انتقام کی آخری ہچکی، مگر فتح نواز شریف کی، اللّہ کا شکر‘۔

مریم نواز نے مزید کہا کہ ’ڈھائی سال کے طویل انتقام نما احتساب کے بعد، تین نسلیں کھنگالنے کے بعد، ایک پائی کی کرپشن نہ کِک بیک نہ کمیشن۔ نا سرکاری خزانے میں رتی بھر خیانت۔

ان کا کہنا تھا کہ ’جتنے بھی فیصلے آئے، ان کے مرحوم والد کے ذاتی کاروبار کے حوالے سے آئے، اس میں بھی کچھ غلط نہ مل سکا تو مفروضوں پر سزائیں سنائی گئیں، آج کا فیصلہ نواز شریف کی امانت، صداقت اور دیانت پر ایک اور مہر ہے‘۔

سابق وزیراعظم کی صاحبزادی نے کہاکہ ’فیصلے انشاءاللہ ختم ہو جائیں گے، جو باقی رہ جائے گا وہ ہے نواز شریف کی سچائی اور مخالفوں پر ظلم کا بوجھ، جس کو وہ ڈھوتے رہیں گے‘۔

مریم نواز کا کہنا تھا کہ ’کیونکہ حکومت،طاقت اور اختیارات ہوتے ہی ختم ہونے کے لیے ہیں، وقت بدلتے اور حالات الٹتے دیر نہیں لگتی، یاد رکھیں، ظلم جب حد سے بڑھتا ہے تو مٹ جاتا ہے‘۔

انہوں نے کہا کہ ’نواز شریف کے خلاف الزامات میں رتی برابر بھی سچائی ہوتی، ثبوت ہوتے یا ایک بھی گواہی ہوتی تو دس ہزار درہم کو بہانہ نا بنایا جاتا، خاندانی کاروبار اور جائز ذاتی لین دین کا سہارا نہ لینا پڑتا، یہی نواز شریف کی فتح ہے، نواز شریف کے ساتھ ساتھ مسلم لیگ ن کا ہر ووٹر بھی آج سرخرو ہوا‘۔

واضح رہے کہ ایون فیلڈ نیب ریفرنس میں احتساب عدالت نے نوازشریف کے ساتھ مریم نواز اور ان کے شوہر محمد صفدر کو بھی سزائیں سنائی تھیں جنہیں اسلام آباد ہائیکورٹ نے معطل کیا۔

ٹوئٹر پر سرگرم رہنے والی مریم نواز نے ضمانت پر جیل سے رہائی کے بعد خاموشی اختیار کرلی تھی تاہم گزشتہ روز سے وہ ایک بار پھر سرگرم ہوگئی ہیں۔

Please follow and like us:

Comments are closed.