Press "Enter" to skip to content

امن اورعلی رضا کے قتل سے متعلق رپورٹ کابینہ اجلاس میں پیش ہوگی، گورنر سندھ

کراچی: گورنر سندھ عمران اسماعیل کا کہنا ہے کہ شہر کے امن و امان اور علی رضا عابدی کے قتل پر رپورٹ تیار ہے جو کل وفاقی کابینہ اجلاس میں پیش ہوگی۔

کراچی میں گورنر سندھ عمران اسماعیل اور وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی نے ملاقات کی جس میں وفاقی وزیر علی زیدی بھی موجود تھے۔

ملاقات کے بعد قانون نافذ کرنے والے اداروں کے نمائندگان سے میٹنگ کی گئی جس میں گورنرسندھ اور وزیر مملکت کو دہشت گردی کے حالیہ واقعات پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

اجلاس میں علی رضاعابدی کے کیس میں ہونے والی پیش رفت سے بھی آگاہ کیا گیا۔

اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے گورنر سندھ عمران اسماعیل کا کہنا تھا کہ کراچی میں امن وامان اور علی رضا عابدی کے قتل سے متعلق رپورٹ تیار کی ہے جو کل وفاقی کابینہ کے اجلاس میں پیش کی جائے گی اور اہم فیصلے متوقع ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کراچی میں دہشت گردی کو جنم لینے نہیں دیں گے اور اس کیخلاف باقاعدہ حکمت عملی بنارہے ہیں۔

اس موقع پر وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی کا کہنا تھا کہ اب وقت آگیا ہے کہ کراچی سے دہشت گردی کے ناسور کو ہمیشہ کے لیے ختم کیا جائے، وزیراعظم کا کراچی کے عوام کیلئے پیغام ہے کہ علی رضا عابدی کے قاتلوں تک پہنچنے کیلئے ہر ممکن اقدامات کریں گے۔

بعد ازاں گورنر سندھ عمران اسماعیل اور وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی نے علی رضا عابدی کے گھر جاکر ان کے والد سے تعزیت کی اور فاتحہ خوانی کی۔

یاد رہے کہ گزشہ روز ایم کیو ایم کے سابق رہنما اور قومی اسمبلی کے سابق رکن علی رضا عابدی کو نامعلوم ملزمان نے ڈیفنس فیز 5 کے علاقے خیابان غازی میں ان کے گھر کے باہر نشانہ بنایا تھا، جس کے نتیجے میں وہ دم توڑ گئے تھے۔

Please follow and like us:

Comments are closed.